بے حمیتی کے سنچورین ٹینک ۔ طارق اسمٰعیل ساگر

اسٹینڈرڈ
بے حمیتی کے سنچورین ٹینک ۔ طارق اسمٰعیل ساگر

میں زید حامد کو صرف ان کی تحریروں یا ٹی وی کے مباحث کے حوالے سے جانتا ہوں، اس کے علاوہ میرا ان سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ انہیں متنازعہ شخصیت کہا جاتا ہے۔ لیکن میں ان کی عظمت کو سلام کرتا ہوں کہ انہوں نے کم از کم ان مادر پدر آزاد بھارت نوازوں کا خبثِ باطن تو عوام پر ظاہر کروا دیا۔اور ماروی سرمد کے اس بیان کے بعد کہ وہ پاکستان کو ایک سیکولر سٹیٹ بنا کر رہیں گے، سیفما کی اصلیت بے نقاب کر دی۔

Advertisements

One response »

  1. اور ماروی سرمد کا يہ کہنا کہ وہ پاکستان کو ایک سیکولر سٹیٹ بنا کر رھيں گيں ۔ اس کے منہ ميں خاک ۔ پاکستان لا إله إلا الله کے نام پر معرض ِ وجود ميں آيا ھے آور انشاء اللہ محمدا رسول الله تکميل ِ پاکستان ھو کر رھے گی ۔ آور جن کم فہموں کی نظر ميں سر ذيد حامد ايک متنازعہ شخصیت ھيں ان کو بھی اللہ تعالی نيکی کی ھدايت دے مگر ھم تو ان کی روحانيت کے قائل ھيں آور سلوٹ کرتے ھيں ۔

    اس بدتميز عورت کے ليۓ ميں ضرور لکھوں گي ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ذرا مجھے بھی اس کی تفصيل مل جاۓ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ايسی عورت کو تو نہيں چھوڑنا چاھيۓ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ اس کی جرآت کيسے ھوئي کہ اس نے شاہ جی کے ساتھہ بدتميزی کی ۔۔۔۔۔۔۔۔ تو پھر ہميں بھی پورا پورا حق ھے

    ھندو پاکستان ميں رہ کر پاکستان کے خلاف کام کريں گيں تو ہميں برداشت نہيں کرنا چاھيۓ

    اقليتوں کو اپنے حقوق کے ناجائز استعمال کرنے سے روکنا پڑے گا
    يہ ہمارا پيارا پاکستان ھے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ھم اس کے امين ھيں ، اس کی جڑوں کو ہمارے ننھے منے شہيدوں کا لہو سيراب کر تا ھے ۔ اس کو اقبال کے ايک ننھے منے بھولے بھالے شاھين راشد منہاس کی عقابی نظروں نے آسمانوں کی بلنديوں سے ديکھہ کر ھواؤں کے سينے چيڑنے پر مجبور کر ديا تھا ، آور يہ ثابت کر ديا تھا کہ عقاب کا بچہ بھی عقاب ھی ھوتا ھے ، اس کی فطرت ميں وہی چھپٹنا ، پلٹنا ، لپکنا ھی ھوتا ھے ۔ ماروی سرمد کے منہ ميں خاک ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ يہ پيارا پاکستان اللہ کے نام پر بنا ھے آور حبيبی سيدی صلی اللہ عليہ و سلم کے مدينة الاولی کے نقشہ پر قائم رھے گا انشاء اللہ اسے آنچ نہيں آنے ديں گيں ۔ پاکستان پر بچہ بچہ جان نچھاور کرنے کو تيار ھو جاتا ھے ، ذرا وقت تو آنے دو ، ديکھو کيآ ھو تا ھے ۔ پھر ايک بار آوازيں گونجيں گيں ۔

    اج ھندوآں جنگ دی گل چھيڑی
    مہاراج آۓ کھيڈ تلوار دی آۓ
    جنگ کھيڈ نيئ ھوندی زنانی آں دی

    ان کو 1965 کا 6 ستمبر ياد نہ دلايا تو ہمارا نام بدل دينا ۔ آج 6 ستمبر کی رات يہ عہد کرتے ھيں اپنی اس پاک دھرتی سے تجھہ پہ آنچ نہ آنے ديں گيں ۔ ھم پہلے ھی تجھہ سے شرمندہ ھيں ، اب آور شرمندہ نہيں ھو سکتے ۔

    ميرے محبوب وطن تجھہ پہ اگر جاں ھو نثار
    ميں يہ سمجھوں گا ٹھکانے لگا سرماياء تن
    آۓ وطن پاک وطن

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s